رمضان بازا رپیرمحل تحصیل انتطامیہ کی نااہلی کی نذر ، چینی، گھی،گوشت سمیت ضروریات زندگی کی دیگر اہم اشیا خوردونوش رمضان بازار میں نایاب

پنجاب حکومت کے حکم پر پیرمحل میں لگایا گیا رمضان بازار تحصیل انتطامیہ کی نااہلی کی نذر ، چینی، گھی،گوشت سمیت ضروریات زندگی کی دیگر اہم اشیا خوردونوش رمضان بازار میں نایاب تفصیل کے مطابق پنجاب حکومت کے احکامات پر ڈپٹی کمشنر ٹوبہ کی زیر نگرانی میونسپل کمیٹی پیرمحل نے مارکیٹ کمیٹی کے اشتراک سے غلہ منڈی پیرمحل کے اندر شامیانے لگاکر رمضان بازار قائم کیا جس میں چینی، گھی،گوشت کے سٹالز خالی پڑے ہیں جبکہ روز مرہ کے استعمال دیگر اشیا خورنوش بھی رمضان بازار میں میسر نہ ہے رمضان بازار میں سبزیوں کے سٹالز پر پڑی خالی ٹوکریوں نے برائلر ، چھوٹے بڑے گوشت کے سٹالز پر رکھے خالی پنچرے تحصیل انتظامیہ کی کارکردگی کا پول کھول رہے ہیں مارکیٹ کمیٹی کے گرین چینل سٹال پر ٹوکریوں میں پڑی ایک دو کلو برائے نام سبزیاں رمضان بازار میں آنے والے صارفین سے مذاق کے مترادف ہے رمضان بازار میں خرید اری کرنے کے آنے والے شہریوں کا کہنا ہے کہ رمضان بازار اور اوپن مارکیٹ کے ریٹ میں کوئی خاص فرق نہیں کچھ چیزیں تو رمضان بازار میں اوپن مارکیٹ سے دس بیس روپے مہنگی مل رہی ہیں اور جن چیزوں پر سبسڈی دی گئی ہے وہ رمضان بازار میں میسر ہی نہیں ہیںحکومت 63روپے اور 85روپے کے چینی کا ریٹ دے رہی ہے مگر یہ آٹا اور چینی کب ملے گی شہریوں نے کہا کہ نااہل تحصیل انتظامیہ کے کارکردگی کے خلاف ڈپٹی کمشنر ٹوبہ ٹیک سنگھ عمر جاوید کمشنر فیصل آباد اور وزیر اعلی پنجاب نوٹس لیں

اپنا تبصرہ بھیجیں